اللہ کے نام سے جو رحمان و رحیم ہے بِسْمِ ٱللَّهِ ٱلرَّحْمَٰنِ ٱلرَّحِيمِ
قسم ہے آسمان کی اور رات کو نمودار ہونے والے کی وَٱلسَّمَآءِ وَٱلطَّارِقِ۝۱
اور تم کیا جانو کہ وہ رات کو نمودار ہونے والا کیا ہے؟ وَمَآ أَدْرَىٰكَ مَا ٱلطَّارِقُ ۝۲
چمکتا ہوا تارا ٱلنَّجْمُ ٱلثَّاقِبُ ۝۳
کوئی جان ایسی نہیں ہے جس کے اوپر کوئی نگہبان نہ ہو إِن كُلُّ نَفْسٍ لَّمَّا عَلَيْهَا حَافِظٌ ۝۴
پھر ذرا انسان یہی دیکھ لے کہ وہ کس چیز سے پیدا کیا گیا ہے فَلْيَنظُرِ ٱلْإِنسَٰنُ مِمَّ خُلِقَ ۝۵
ایک اچھلنے والے پانی سے پیدا کیا گیا ہے خُلِقَ مِن مَّآءٍ دَافِقٍ ۝۶
جو پیٹھ اور سینے کی ہڈیوں کے درمیان سے نکلتا ہے يَخْرُجُ مِنۢ بَيْنِ ٱلصُّلْبِ وَٱلتَّرَآئِبِ ۝۷
یقیناً وہ (خالق) اُسے دوبارہ پیدا کرنے پر قادر ہے إِنَّهُۥ عَلَىٰ رَجْعِهِۦ لَقَادِرٌ ۝۸
جس روز پوشیدہ اسرار کی جانچ پڑتال ہوگی يَوْمَ تُبْلَى ٱلسَّرَآئِرُ ۝۹
اُس وقت انسان کے پاس نہ خود اپنا کوئی زور ہوگا اور نہ کوئی اس کی مدد کرنے والا ہوگا فَمَا لَهُۥ مِن قُوَّةٍ وَلَا نَاصِرٍ ۝۱۰
قسم ہے بارش برسانے والے آسمان کی وَٱلسَّمَآءِ ذَاتِ ٱلرَّجْعِ ۝۱۱
اور (نباتات اگتے وقت) پھٹ جانے والی زمین کی وَٱلْأَرْضِ ذَاتِ ٱلصَّدْعِ ۝۱۲
یہ ایک جچی تلی بات ہے إِنَّهُۥ لَقَوْلٌ فَصْلٌ ۝۱۳
ہنسی مذاق نہیں ہے وَمَا هُوَ بِٱلْهَزْلِ ۝۱۴
یہ لوگ چالیں چل رہے ہیں إِنَّهُمْ يَكِيدُونَ كَيْدًا ۝۱۵
اور میں بھی ایک چال چل رہا ہوں وَأَكِيدُ كَيْدًا ۝۱۶
پس چھوڑ دو اے نبیؐ، اِن کافروں کو اک ذرا کی ذرا اِن کے حال پر چھوڑ دو فَمَهِّلِ ٱلْكَٰفِرِينَ أَمْهِلْهُمْ رُوَيْدًۢا ۝۱۷