اللہ کے نام سے جو رحمان و رحیم ہے بِسْمِ ٱللَّهِ ٱلرَّحْمَٰنِ ٱلرَّحِيمِ
کیا تمہیں اُس چھا جانے والی آفت کی خبر پہنچی ہے؟ هَلْ أَتَىٰكَ حَدِيثُ ٱلْغَٰشِيَةِ۝۱
کچھ چہرے اُس روز خوف زدہ ہونگے وُجُوهٌ يَوْمَئِذٍ خَٰشِعَةٌ ۝۲
سخت مشقت کر رہے ہونگے عَامِلَةٌ نَّاصِبَةٌ ۝۳
تھکے جاتے ہونگے، شدید آگ میں جھلس رہے ہونگے تَصْلَىٰ نَارًا حَامِيَةً ۝۴
کھولتے ہوئے چشمے کا پانی انہیں پینے کو دیا جائے گا تُسْقَىٰ مِنْ عَيْنٍ ءَانِيَةٍ ۝۵
خار دار سوکھی گھاس کے سوا کوئی کھانا اُن کے لیے نہ ہوگا لَّيْسَ لَهُمْ طَعَامٌ إِلَّا مِن ضَرِيعٍ ۝۶
جو نہ موٹا کرے نہ بھوک مٹائے لَّا يُسْمِنُ وَلَا يُغْنِى مِن جُوعٍ ۝۷
کچھ چہرے اُس روز با رونق ہوں گے وُجُوهٌ يَوْمَئِذٍ نَّاعِمَةٌ ۝۸
اپنی کار گزاری پر خوش ہونگے لِّسَعْيِهَا رَاضِيَةٌ ۝۹
عالی مقام جنت میں ہوں گے فِى جَنَّةٍ عَالِيَةٍ ۝۱۰
کوئی بیہودہ بات وہاں نہ سنیں گے لَّا تَسْمَعُ فِيهَا لَٰغِيَةً ۝۱۱
اُس میں چشمے رواں ہونگے فِيهَا عَيْنٌ جَارِيَةٌ ۝۱۲
اُس کے اندر اونچی مسندیں ہوں گی فِيهَا سُرُرٌ مَّرْفُوعَةٌ ۝۱۳
ساغر رکھے ہوئے ہوں گے وَأَكْوَابٌ مَّوْضُوعَةٌ ۝۱۴
گاؤ تکیوں کی قطاریں لگی ہوں گی وَنَمَارِقُ مَصْفُوفَةٌ ۝۱۵
اور نفیس فرش بچھے ہوئے ہوں گے وَزَرَابِىُّ مَبْثُوثَةٌ ۝۱۶
(یہ لوگ نہیں مانتے) تو کیا یہ اونٹوں کو نہیں دیکھتے کہ کیسے بنائے گئے؟ أَفَلَا يَنظُرُونَ إِلَى ٱلْإِبِلِ كَيْفَ خُلِقَتْ ۝۱۷
آسمان کو نہیں دیکھتے کہ کیسے اٹھایا گیا؟ وَإِلَى ٱلسَّمَآءِ كَيْفَ رُفِعَتْ ۝۱۸
پہاڑوں کو نہیں دیکھتے کہ کیسے جمائے گئے؟ وَإِلَى ٱلْجِبَالِ كَيْفَ نُصِبَتْ ۝۱۹
اور زمین کو نہیں دیکھتے کہ کیسے بچھائی گئی؟ وَإِلَى ٱلْأَرْضِ كَيْفَ سُطِحَتْ ۝۲۰
اچھا تو (اے نبیؐ) نصیحت کیے جاؤ، تم بس نصیحت ہی کرنے والے ہو فَذَكِّرْ إِنَّمَآ أَنتَ مُذَكِّرٌ ۝۲۱
کچھ ان پر جبر کرنے والے نہیں ہو لَّسْتَ عَلَيْهِم بِمُصَيْطِرٍ ۝۲۲
البتہ جو شخص منہ موڑے گا اور انکار کرے گا إِلَّا مَن تَوَلَّىٰ وَكَفَرَ ۝۲۳
تو اللہ اس کو بھاری سزا دے گا فَيُعَذِّبُهُ ٱللَّهُ ٱلْعَذَابَ ٱلْأَكْبَرَ ۝۲۴
اِن لوگوں کو پلٹنا ہماری طرف ہی ہے إِنَّ إِلَيْنَآ إِيَابَهُمْ ۝۲۵
پھر اِن کا حساب لینا ہمارے ہی ذمہ ہے ثُمَّ إِنَّ عَلَيْنَا حِسَابَهُم ۝۲۶